37

شہبازشریف کے بعدمسلم لیگ ن کے ایک اوراہم رہنماگرفتار

گوجرانوالہ(اسلام آباداپ ڈیٹس) ایف آئی اے نے سابق ڈی جی پاکستان سپورٹس بورڈ اختر نواز گنجیرا کو کرپشن کے الزام میں گرفتار کر لیا ہے۔ ایف آئی اے حکام کا کہنا ہے کہ اختر نواز گنجیرا کو نارووال سپورٹس سٹی میں کروڑوں روپے کی مالی بے ضابطگیوں کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے، ایک موقر قومی اخبار کی رپورٹ کے مطابق سابق ڈی جی پاکستان سپورٹس بورڈ اختر نواز گنجیرا سابق وفاقی وزیر برائے پلاننگ احسن اقبال کے قریبی ساتھی ہیں اور انہی کے ایماء پر یہ پراجیکٹ شروع کیا گیا تھا۔ سابق ڈی جی نے اسپورٹس سٹی میں من پسند لوگوں کو ٹھیکے دئیے اورغیر معیاری میٹریل استعمال کیا گیا۔ اختر نواز گنجیرا کو ایف آئی اے کے گوجرانوالہ دفتر میں رکھا گیا ہے،ایف آئی اے نے ان کا پانچ روزہ ریمانڈ بھی حاصل کر لیا ہے۔ ایف آئی اے ذرائع کا کہنا ہے کہ اختر نواز سمیت پی ایس بی کے مزید دو افسران کے خلاف تھانہ ایف آئی اے میں مقدمہ درج کیا گیا ہے، مقدمے میں نامزد دیگر ملزمان میں ایکسیئن اعجاز اکبر اور سپرنٹنڈنٹ اظہار احمد بھی شامل ہیں۔ سپورٹس کمپلیکس نارووال پاکستان سپورٹس بورڈ کا سب سے بڑا پراجیکٹ ہے، 2014ء میں سپورٹس کمپلیکس نارووال کی تعمیر پر 3 ارب روپے لاگت آئی تھی، اختر نواز نارووال سپورٹس کمپلیکس کے خود ساختہ اور غیر قانونی پراجیکٹ ڈائریکٹر بنے رہے اور ٹھیکے کے بلوں پر خود ہی دستخط کرتے رہے جب کہ سابق وفاقی وزیر احسن اقبال نے منصوبے کا افتتاح مکمل ہونے سے قبل ہی کر دیا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ ریاض پیرزادہ، احسن اقبال اور یوسف رضا گیلانی کو بھی اس کیس میں قانون نافذ کرنے والے اداروں نے شامل تفتیش کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔واضح رہے کہ ن لیگ کے صدر میاں شہباز شریف کو بھی نیب نے گرفتار کر لیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں